وزیرِ اعلیٰ بلوچستان سے ایک گزارش

Image 

محترم ڈاکٹرمالک بلوچ صاحب 

وزیرِ اعلیٰ بلوچستان

عرض یہ ہے کہ بلوچستان کی موجودہ کشیدہ صورتحال میں جہاں بلوچ عوام پہلے ہی سے لاپتہ افراد کی بازیابی کیلیے تادم مرگ بھوک ہڑتال پر بیٹھے ہیں، جہاں ہر روز بلوچ لاپتہ افراد کی لاشیں گر رہی ہیں، لاپتہ بلوچوں کی فہرست طویل سے طویل تر ہوتی جا رہی ہے، انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کی چیخیں گونج رہی ہیں،ملٹری آپریشن ہو رہے ہیں، بلوچوں کی اجتماعی قبریں دریافت ہو رہی ہیں، ایک ڈر اور خوف پھیلا ہوا ہے، ایسے سنگین حالات میں ان کی بچی کھچی تعلیم کے ذرائع ختم کرنے کیلیے ایک نامعلوم گروہ کہیں سےاچانک پیدا ہو گیا ہے۔ پنجگور ڈسٹرکٹ جہاں لوکل پولیس اور لیویز کے علاوہ ایف سی کے 15000 اہلکار تعینات ہیں،اتنے سخت سیکیورٹی کے حصار میں  ایک غیر معروف تنظیم کا سر اٹھانا اور اس کے خلاف عملی اقدامات کی کمی بہت سے سوالات کو جنم دے رہی ہے

 جنابِ والا:  ایسے میں حالات نوٹس لینے سے نہیں، عملی اقدامات سے صحیح ہوتے ہیں۔ ہمارے حکمرانوں میں چونکہ بلوچوں کی حقِ خود ارادی کی جنگ کا فلسفہ آب سے بہتر اور کوئی نہیں جانتا، بلکہ آپ تو اس کا حصہ بھی رہ چکے ہیں۔۔ اس لیے امید کی جا رہی تھی کہ آپ معاملات کو نسبتاْ بہتر سنبھالیں گے۔ آپ کے ایک سالہ دورِ حکومت میں گو کہ بلوچ عوام کو اپنی آواز بلند کرنے کا موقع ملا مگر مسائل میں کمی نہیں ہوئی۔ آپ سے مودبانہ گزارش ہے کہ برائے مہربانی پنجگور  میں اسکولوں کی بندش کے مسئلے پر اپنی آواز بلند کریں اور ایسے واقعات کی روک تھام کیلیے موئژر پالیسی بنائیں۔ صرف ناراض بلوچوں سے مذاکرات کی باتیں نہ کریں بلکہ ان کے ساتھ ناانصافی کرنے والوں کو بھی روکیں۔ آج اگر پنجگور میں نامعلوم گروہ پیدا ہو سکتے ہیں تو کل تربت میں بھی پیدا ہو سکتے ہیں۔ 

امید کی جاتی ہے کہ آپ ان حالات میں  نہ صرف بحیثیت وزیرِ اعلیٰ بلکہ بحیثیت بلوچ بھی اپنی ذمہ داری کو پورا کریں گے۔  اور اپنی مٹی کا حق ادا کریں گے۔ ورنہ ہم سمجھ لیں گے کہ آپ بھی اختیار کے بغیر اقتدار کی کرسی پر پراجمان رہنے والے ڈمی حکمران سے ذیادہ کچھ نہیں۔ اور مستقبل میں بلوچستان کے حالات میں آپ سے بہتری کی امید کو دفن کر دیں گے۔

                                                      شکریہ

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s